Urdu Planet Forum -Pakistani Urdu Novels and Books| Urdu Poetry | Urdu Courses | Pakistani Recipes Forum  

Go Back   Urdu Planet Forum -Pakistani Urdu Novels and Books| Urdu Poetry | Urdu Courses | Pakistani Recipes Forum > Islam > Islam > Islamic Maloomat > Islamic Books

Notices

Reply
 
Thread Tools Display Modes
Old 10-23-2020, 03:44 PM   #1
blueparadise
 
blueparadise's Avatar

Users Flag!
 
Join Date: Jul 2009
Location: Lahore, Pakistan
Posts: 10,158
blueparadise has a reputation beyond reputeblueparadise has a reputation beyond reputeblueparadise has a reputation beyond reputeblueparadise has a reputation beyond reputeblueparadise has a reputation beyond reputeblueparadise has a reputation beyond reputeblueparadise has a reputation beyond reputeblueparadise has a reputation beyond reputeblueparadise has a reputation beyond reputeblueparadise has a reputation beyond reputeblueparadise has a reputation beyond repute
New شکستِ اعدائے حُسین رض

شکستِ اعدائے حُسین رض
حضرت مولانا اللہ یار خانؒ

مدعیان کے بیانات اور قاتلان حسین رضی اللہ عنہ کی شناخت

گروہ مقتولین کے مشہور ترین ممبران جو قافلہ حسین رضی اللہ عنہ میں شامل تھے اور جن کے بیانات معتبر شیعہ کتب میں تفصیلاً درج ہیں وہ حضرت حسین رضی اللہ عنہ، حضرت زین العابدینؒ، حضرت زینبؒ بنت حضرت علی رضی اللہ عنہ، حضرت فاطمہؒ بنت حسین رضی اللہ عنہ، اور حضرت امِ کلثومؒ بنت حضرت علی رضی اللہ عنہ ہیں۔
ذیل میں ان مدعیان کے بیانات کتب شیعہ کے حوالوں کے ساتھ مختصراً درج کئے جاتے ہیں تاکہ ہر مکتبہء فکر کے لوگوں پر عیاں ہو جائے کہ ان کا متفقہ دعویٰ کن لوگوں پر ہے۔

مدعی اول حضرت حسین رضی اللہ عنہ کا بیان

کوفہ کی جانب سفر کے دوران جب حضرت حسین رضی اللہ عنہ زبالہ کے مقام پر پہنچے تو انہیں حضرت مسلم رضی اللہ عنہ کی شہادت کی خبر ملی، اس پر انہوں نے بے ساختہ فرمایا۔
قد خذلنا شیعَتُنا ہمارے شیعوں نے ہم کو ذلیل کر دیا
(خلاصۃ المصائب صفحہ 49)

ذیل میں حضرت حسین رضی اللہ عنہ کے عین معرکہء کربلا میں قاتلانِ حسین کے سامنے دئیے گئے تین اہم خطبے درج کئے جا رہے ہیں۔

۔.1 تم پر اور تمہارے ارادہ پر لعنت ہو۔ اے بیوفانِ جفا کار، غدارو تم پر وائے ہو۔ تم نے ہنگامہ، اضطراب و اضطرار میں اپنی مدد کے لئے ہم کو بلایا۔ اور جب میں تمہارا کہنا مان کرتمہاری نصرت اور ہدایت کے لئے آیا تو تم نے شمشیرِ کینہ مجھ پر کھینچی۔ اپنے دشمنوں کی تم نے یاوری اور مدد گاری کی اور اپنے دوستوں سے دستبردار ہوئے۔ (جلاء العیون مترجم جلد دوم صفحہ 182، 183 مطبوعہ لاہور)

۔2 اے شیش بن ربعی! اے حجاز بن الحجر! اے قیس بن الشعث! اے زید بن الحرث! کیا تم نے مجھے نہیں لکھا تھا کہ پھل پک گئے۔ زمین سر سبز ہو گئی۔ نہریں ابل پڑیں۔ آپ آئیں گے تو اپنی فوجِ جرار کے پاس آئیں گے۔ جلد آئیے۔ (خلاصۃ المصائب صفحہ 148)

۔3 اور دسویں محرم کا مشہور خطبہ:
افسوس ہو تم پر اے اہل کوفہ، کیا تم بھول گئے اپنے خطوں کواور وہ وعدے جو تم نے کئیے تھے اور خدا تعالیٰ کو ان پر گواہ ٹھہرایا تھا؟ تم پر افسوس ہو تم نے لکھا تھا کہ اہل بیت آئیں۔ ہم ان کی مدد اور پیروی میں جانیں تک قربان کر دیں گے۔ پھر جب وہ (ہم) آئے تو تم ان کو ابن زیاد کے حوالے کئے دیتے ہو۔ واقعی تم لوگ اپنے نبی ﷺ کے برے اخلاف ہو کہ ان کی اولاد کے ساتھ یہ سلوک کرتے ہو۔ خداوند تعالیٰ تم کو قیامت کے دن سیراب نہ کرے (یعنی پانی نہ دے)۔ (زبیح عظیم بحوالہ ناسخ التواریخ صفحہ 335)

لیجئیے مجرموں کی شناخت ہو گئی مگر شیعہ حضرات اب شائید یہ دعویٰ کر بیٹھیں کہ حضرت حسین رضی اللہ عنہ کے مد مقابل تمام لوگ تو کوفی نہ تھے۔ اور اگر کوفی تھے تو تمام کے تمام تو شیعہ نہ تھے۔ تو اس کے جواب میں انہی کی کتابوں سے اقتباسات ذیل میں درج کئے جا تے ہیں:۔

۔ خلاصۃ المصائب صفحہ 201 پر رقم ہے

1:-
حضرت حسین رضی اللہ عنہ کی فوج میں نہ کوئی شامی تھا نہ حجازی بلکہ تمام کے تمام کوفی تھے۔

۔2 اور شیعہ مجتہد قاضی نور اللہ شوستری اپنی کتاب مجالس المومنین مجلس اول صفحہ 25 پر رقم طراز ہیں:۔
اہل کوفہ کے شیعہ ہونے پر دلیل قائم کرنے کی ضرورت نہیں۔ ان کا سنی ہونا خلافِ اصل اور محتاجِ دلیل ہے۔ اگرچہ ابو حنیفہ کوفی تھا۔

مندرجہ بالا خطبوں اور اقتباسات سے درج ذیل امور ثابت ہوگئے۔
۔1 حضرت حسین رضی اللہ عنہ کے مد مقابل فوج تمام کی تمام کوفی دستوں پر مشتمل تھی۔
۔2 تمام کے تمام کوفی شیعہ تھے۔
۔3 کوفی شیعوں نے حضرت حسین رضی اللہ عنہ کو خطوط لکھے تھے جن میں انہوں نے خدا کو گواہ رکھ کر وعدہ کیا تھا کہ وہ اہل بیت کی مدد کریں گے۔ اور اس مقصد کے لئے اپنی جانوں کی بازی لگانے سے بھی گریز نہیں کریں گے۔
۔4 جب حضرت حسین رضی اللہ عنہ ان کی دعوت پر تشریف لے گئے تو شیعان کوفہ نہ صرف اپنے وعدوں سے پھر گئے بلکہ مدِّ مقابل بن کر سامنے آ گئے۔
۔5 شیعانِ کوفہ نے ہی اہل بیت پر دریائے فرات کا پانی بند کیا۔
۔6 اور آخر کار حضرت حسین رضی اللہ عنہ اور دیگر اہل بیت کے قتل کے مرتکب ہوئے۔

لیکن سوال یہ پیدا ہوتا ہے کہک انہوں نے ایسا کیوں کیا؟
اگر تھوڑا سا غور و فکر سے کام لیا جائے تو اس کا جواب بھی مل جائے گا۔ حضرت حسین رضی اللہ عنہ کے خطبوں میں اس کا اشارہ بھی موجود ہے کہ کوفی شیعہ اہل بیت کے لئے اپنے دلوں میں کوئی پرانا بغض، کینہ یا عداوت رکھتے تھے جس کی وجہ سے انہوں نے اہل بیت کی محبت کا ڈرامہ کھیلا اور اس کی آڑ میں انہوں نے حضرت حسین رضی اللہ عنہ اور دیگر اہل بیت علی رضی اللہ عنہ کو اپنی مکروہ سازش کا نشانہ بنایا۔ اس کینہ کی نشاندہی بھی کوئی مشکل امر نہیں۔ تفصیل تو آگے آئے گی مگر یہاں اتنا بتا دینا کافی ہے کہ خلیفہء دوم حضرت عمر رضی اللہ عنہ کے دور میں مسلمانوں کے ہاتھوں ایرانیوں کی شکست ہی اس کینہ کی بنیاد تھی۔ یہودی دماغ نے اسی کینہ سے فائدہ اٹھایا اور ایرانیوں کا ساتھ دینا شروع کر دیا۔ وہ لوگ مسلمانوں سے میدانِ کارزار میں بدلہ لینے کی سکت نہ رکھتے تھے اسی لئے انہوں نے حبِ علی رضی اللہ عنہ کی آڑ میں اور یہودی ابن سباء(اس وقت کا لارنس آف عریبیا) کی وساطت سے خیبر اور قادسیہ کی ذلت کا انتقام لینے کا پروگرام بنایا۔ سانحہ کربلا صدیوں پر محیط اس انتقام کی ابتدائی کڑیوں میں سے ایک کڑی تھی۔

قدرت کا انتقام بھی عجب صورتوں میں نمودار ہوتا ہے۔ سازشیوں نے تو حُبّ علی رضی اللہ عنہ اور اولادِ علی رضی اللہ عنہ کے نعرے کو اپنے انتقام کے لئے اپنایا تھا۔ مگر قدرت نے ان کی سازش کو ان پر الٹا دیا۔ ہوا یوں کہ انہی لوگوں کی آنے والی نبسلوں نے اس سازش کو اپنا مذہب سمجھ کر اپنا لیا اور شیعہ مذہب کا نام دے دیا۔ بدا سے تقیے تک اور تقیے سے تبرّے تک یہی ان لوگوں کی مبلغ سرمایہ ہے۔ اور یوں انجام کار نسل در نسل یہ لوگ اپنی سازش کا شکار ہوتے چلے گئے۔ اور اب تو اپنے جرم پر اپنے آپ کو پٹتے رہنا ہی ان کا ایمان بن چکا ہے۔ جرم ہی اتنا سنگین ہے کہ قیامت تک پٹتے رہنے سے بھی شاید تلافی نہ ہو سکے۔
جاری ہے۔۔۔

کتاب "شکست اعدائے حسین رض پی ڈی ایف میں حاصل کرنے کے لئے نیچے دئیے ہوئے لنک پر کلک کریں۔

Attached Files
File Type: pdf Shikast-e-Ahdai-Hussain.pdf (3.11 MB, 0 views)
blueparadise is offline   Reply With Quote
Reply

Bookmarks

Tags
اعدائے, حُسین, رض, شکستِ


Currently Active Users Viewing This Thread: 1 (0 members and 1 guests)
 
Thread Tools
Display Modes

Posting Rules
You may not post new threads
You may not post replies
You may not post attachments
You may not edit your posts

BB code is On
Smilies are On
[IMG] code is On
HTML code is Off

Forum Jump


All times are GMT +6. The time now is 08:30 AM.


Powered by vBulletin® Version 3.8.9
Copyright ©2000 - 2021, vBulletin Solutions, Inc.